اسلامک کارنر

ے تحاشا دولت

بہت سے ایسے لوگوں کے رزق میں برکت نہیں پائی جاتی ۔اس مسئلہ میں۔جاری ہے ۔مبتلا افراد روزانہ بعد نماز فجر اور عشاء کے گیارہ گیارہ سو مرتبہ یاغنی کا ورد کریں۔تو انشاء اللہ رزق میں برکت ہوگی اور پیسہ بھی ٹکنا شروع ہوجائے گا۔یہ مجرب وظیفہ ہے اور رزق میں بندش ختم کرنے بہترین علاج بھی۔جودکاندار اور تاجر دفتر کھولنے سے پہلے ستر مرتبہ یاغنی پڑھے گا۔جاری ہے ۔ تو انشاء اللہ کاروبار میں برکت ہوگی (١)عمل کی مقبولیت میں اخلاص شرط ہے اگر یہ مفقود ہے تو عمل رائیگاں ہے۔ اس کی اہمیت کا اس بات سے اندازہ لگا لیجیے کہ اللہ تعالی نے فرمایا:”وما امروا الا لیعبدواللہ مخلصین لہ الدین۔” انہیں اس کے سوا کوئی حکم نہیں دیا گیا کہ صرف اللہ کی عبادت کریں۔

اور اسی کے لیے دین کو خالص رکھیں۔(البینۃ:٥) اور رسول اللہ ؐ نے فرمایا:’انما الاعمال بالنیات وانما لکل امرئ ما نوی” تمام اعمال کا دارومدار نیتوں پر ہے اور ہر شخص کو اس کی نیت کے مطابق جزاء ملے گی۔ (صحیح البخاری:١،صحیح مسلم:١٩٠٧) یاد رہے کہ عمل خواہ کتنا ہی اچھا او ر افضل ہو لیکن اگر نیت خالص نہیں تو وہ عمل ضائع ہو جائے گا۔کیونکہ اللہ تعالی کو اپنے بندوںسے تمام اعمال میں اخلاص مطلوب ہے ۔اللہ تعالی نے فرمایا:”لن ینال اللہ لحومھا ولا دماؤھا ولکن ینالہ التقوی منکم”اللہ تعالی کو قربانی کا گوشت اور خون نہیں پہنچتا بلکہ اسے تو تمہارا تقوی پہنچتا ہے۔(الحج:٣٧)یہاں تقوی سے مراد اخلاص ِ نیت ہے۔ رسول اللہؐ نے فرمایا :”ان اللہ لا ینظر الی صورکم واموالکم ،ولکن ینظر الی قلوبکم واعمالکم۔” بے شک اللہ تعالی تمہاری شکل و صورت اور مال ودولت کو نہیں دیکھتاوہ تو تمھارے اعمال اور دلوں کو دیکھتا ہے۔(صحیح مسلم٢٥٦٤

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button