اسلامک کارنر

مرد کی طرح خواب دیکھے ، اُس پی بھی غسل واجب ہوجایئگا؟

حضرت عائشہؓ فرماتی ہیں کہ وہ آنحضرت ﷺ کے ساتھ بیٹھی تھی ۔کہ حضرت ام سلیم ؓ نے عرض کیا کہ یا رسول اللہ اللہ تعالیٰ حق بات کہنے سے نہیں شرماتا ۔اگر عورت بھی مرد کی خواب دیکھے تو اُس پر غسل واجب ہو جائیگا ؟ آپ ﷺ نے فرمایا ہاں حضرت عائشہ ؓ فرماتی ہیں کہ میں نے اُم سلیم ؓ سے کہا اف ہے تم پر کیا عورت بھی ایسا خواب دیکھ سکتی ہے ؟ حضورﷺ نے فرمایا تیرے ہاتھ خاک آلودہ ہو ں۔ اگر عورت کو انزال نہیں ہوتا تو بچہ عورت کی صورت میں کیوں جاتا (حدیث سنن نسائی : جلد اول )

سوال: کیا عورت کو بھی مرد کی طرح خواب میں احتلام ہوجاتا ہے ۔ا ور اگر ہوجاتا ہے تو مرد کی طرح غسل کرنا لازمی ہوجاتا ہے ۔جواب: جی ہاں ! مرد کی طرح عورت کو بھی احتلام ہوتا ہے لیکن جس طرح مرد پر غسل اس وقت واجب ہوتا ہے جب وہ منی دیکھے، اسی طرح عورت پر اس وقت واجب ہوتا ہے جس وہ جسم یا کپڑوں پر منی دیکھے ۔فی صحیح البخاری : “ام سلمۃ ام المومنین رضی اللہ عنہ انھاقالت : ” جاءت ام سلیمہ امراۃ ابی طلحۃ الی رسول اللہ ﷺ فقالت : “ان اللہ لا یستحی من الحق، ھل علی الماۃ من غسل اذا ھی احتلمت ؟ فقال رسول اللہ ﷺ : ” نعم ! اذا رات الماء ۔ ” (صحیح البخاری :1/42 باب اذا احتلمت المراۃ )وفی دارالمختار : “قولہ : ( وکذ المراۃ ) فی البحر عن المعراج : ” لو احتلمت المراۃ، ولم یخرج الماء الی ظھر فرجھا، عن محمد رحمہ اللہ : یجب ، وگی ظاھر الروایۃ : لایجب ۔ لان خروج منیھا الی فرجھا الخارج شرط لوجوب الغسل علیھا ، وعلیہ الفتوی”

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button