اسلامک کارنر

دل کی بند شریانوں کو کھولنے والی ایسی روحانی تسبیح جو دل کو پھر سے جوان کردے

دعا کی قبولیت کیلئے متعدد اوقات اور جگہیں ہیں، جن میں سے ہم کچھ یہاں بیان کرتے ہیں مصیبت آنے سے پہلے ہمیں کیا کرنا چاہیے عبداللہ بن عبید فرماتے ہیںکہ میں نے اللہ کے رسولۖ سے عر ض کیا ۔کہ میں کیا پڑھا کروں اپنی حفاظت کے لیے مصیبتوں کو ٹالنے کے دل کا مرض اب عام ہوچکا ہے ۔اس کا علاج کرانا اب اتنا سہل بھی نہیں ہے ۔ انسان اگرچہ دل کے مرض کے بہت سے طریقہ علاج سے استفادہ کرتا ہے لیکن دل کا مرض اب عام ہوچکا ہے ۔ اس کا علاج کرانا اب اتنا سہل بھی نہیں ہے۔ انسان اگرچہ دل کے مرض کے بہت سے طریقہ علاج سے استفادہ کرتا ہے لیکن ایک مسلمان کے دل کا سکون اور قرار بلاشبہ قرآن مجید میں موجود ہے۔ قرآن مجید انسانوں کو روحانی اور جسمانی شفا کی نوید سناتا ہے ۔

دل کی تکالیف میں مبتلا رہنے والوں اورخاص طور پر جن کے دل کی شریانیں بند ہو چکی ہوں تو انہیں چاہیے کہ وہ اسکا روحانی علاج بھی کریں اور اللہ تباک تعالٰی کے اسم پاک یافتاح کو اپنی تسبیح بنا لیں ۔اسکا طریقہ یہ ہے کہ ذاکر نماز فجرکے بعد 700 مرتبہ یا فتاح کو اول و آخر7 مرتبہ درود پاک کے ساتھ پڑھے،اس عمل کی مدت40 دن ہے۔ اگر اس کا نقش بنا کر پانی میں ڈال کر پیئے تو دل کے مرض سے خلاصی ہوجائے گی ۔ یاد رہے کہ نقش عمل کے بعد روزانہ ایک لکھا جائے گا اور اس ایک نقش کو ایک دن کے لیے پینا ہو گا۔اسی طرح چالیس دنوں میں چالیس نقوش لکھے اور پئے جائیں گے۔

ان شاء اللہ مرض دور ہو گا اور دل کے بند والو کھل جائیں گے۔صوفیا کرام کا کہنا ہے کہ یافتاح سے مراد وہ ذات ہے جس کی نظر عنایت سے ہر مصیبت، بلا اور آفت دور ہو جاتی ہے۔ اس کی مہربانی سے ہر مشکل آسان ہو جاتی ہے اور سختی ختم ہو جاتی اورتنگی راحت میں بدل جاتی ہے اور اس کی مدد سے دشمن پر فتح حاصل کرنے کے دروازے کھل جاتے ہیں۔غرض ایسی ذات جو ہر قسم کی تکلیف کو دور فرما کر راحت اور رحمت کے باب کھولے اسے فتاح کہتے ہیں۔ دل کی تنگی کھولنے کے لئے اس کو معمول بنا لینا چاہئے ،جو لوگ یافتاح کی تسبیح جاری رکھتے ہیں ان کے دل ہمیشہ صحت مند رہتے ہیں

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button