تازہ تریننیشنل خبریں

حکومتی اتحادیوں کا ساتھ اس لئے چاہتے ہیں کیونکہ ۔۔۔ بلاول بھٹو نے اہم وجہ بتا دی

چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو نے کہا کہ تحریک عدم اعتماد کے لئے ہمارے نمبرز پورے ہیں لیکن اس کے باوجود حکومت کے اتحادیوں کو ساتھ لے کر چلنا چاہتے ہیں کیونکہ اگلی حکومت میں مسائل کا حل مشترکہ رائے سے کیا جائے گا۔
اسلام آباد میں اسلم بھوتانی کی متحدہ اپوزیشن میں شمولیت کے موقع پر متحدہ اپوزیشن کے رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ عمران خان اور پاکستان اکٹھے نہیں چل سکتے ، پاکستان کو دشمن بھی وہ نقصان نہیں پہنچا سکے جو عمران خان نے پہنچایا، لوگ پاکستان کی معیشت کا سوچتے ہیں مگر عمران خان بینک کرپٹ کی جانب ملک کو لے گئے۔
لاول بھٹو نےکا کہ جہاں تک عمران خان کو خط کے ذریعے دھمکی کا معاملہ ہے تو ہم چیلنج کرتے ہیں کہ وہ خط کو قوم کے سامنے لائیں ، تین سال سے پاکستان کے عوام پہچان سکے ہیں کہ عمران خان کی عادت ہے کہ وہ جھوٹ بولتے ہیں ، جھوٹے الزام لگاتے ہیں ۔ ہمارے پاس تحریک عدم اعتماد کیلئے تعداد پوری ہے اب مطلوبہ تعداد سے بھی زیادہ نمبر ہو گئے ہیں ، ہم اپنی تعداد کے ساتھ اتحادی جماعتوں کو لے کر چل رہے ہیں کیوں کہ ہمیں مل کر بات کرنے کی ضرورت ہے ۔

بلاول بھٹو نےمزید کہا کہ ایم کیو ایم کو بار بار کہا ، اب پھر کہتا ہوں کہ ہر صورت میں ملک اور کراچی کی ترقی کیلئے فیصلہ کر لیا ہے کہ ایم کیو ایم کے ساتھ مل کر کام کرنا ہے ۔
ایک صحافی نے آصف علی زرداری سے سوال کا کہ تین سال سے زائد عرصہ تک حکومت کے ساتھ رہنے والے اب آپ کے پاس آئیں ہیں ، کیا آپ ان پر اعتبار کر سکتے ہیں ۔ سابق صدر نے جواب دیا کہ ان کو احساس ہو گیا ہے کہ پاکستان کو بچانا ہے جس میں سب کا بھلا ہے ، ان کا بھی بھلا ہے ، ہمارا بھی بھلا ہے اور ہماری آنے والی نسلوں کا بھی بھلا ہے ۔

آصف زرداری نے مزید کہا کہ میں نے پہلے کبھی اسلم بھوتانی کی طرف ہاتھ نہیں بڑھایا ، اب ملک کیلئے ضرورت پڑی تو ہاتھ بڑھایا اور انہوں نے ہاتھ تھام لیا اور ہمارے ساتھ کھڑے ہو گئے ، بھوتانی صاحب کی طرف اور بھی کافی دوست ہیں ، ہم پاکستان کا سوچ رہے ہیں طاقت تو آنی جانی چیز ہے

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button