پاکستان

نواز شریف کی محبت میں گرفتار شخص 6 لاکھ کا ٹکٹ لیکر کینیڈا سے بہاولپور جلسے میں پہنچ گیا

بہاولپور (این این آئی)سابق وزیر اعظم نوازشریف کی محبت میں گرفتار شخص 6 لاکھ کا ٹکٹ لیکر کینیڈا سے بہاولپور جلسے میں پہنچ گیا۔نجی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے لیگی سپورٹر کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن سے میری محبت 22 سال پرانی ہے،

میں 10 سال کی عمر سے ن لیگ کو سپورٹ کر رہا ہوں۔لیگی کارکن نے کاہکہ جب مجھے کینیڈا میں مسلم لیگ ن کے جلسے کا پتہ چلا تو میں نے اسلام آباد اور لاہور کی ٹکٹ کنفرم کروانا چاہیں تاہم مجھے نہیں ملیں جس کے بعد مجھے دو ملکوں میں گھوم کر پاکستان آنا پڑا جس کی وجہ سے مجھے ٹکٹ 5 سے 6 لاکھ روپے کی پڑی لیکن میں نے سوچا قائد کا جلسہ ہے اور خطاب کے لیے میرے قائد کی بیٹی آرہی ہے تو جانا چاہیے۔کارکن نے گفتگو میں بتایا کہ میں اس ڈویژن کا سیکریٹری اطلاعات و نشریات بھی ہوں لہٰذا میری ذمہ داری تھی کہ بطور اوورسیز پاکستانی میں جہاں بھی موجود ہوں جلسے میں شریک ہو کر اپنے قائد کے شانہ بشانہ پاکستان کی نمائندگی کروں، یہ لاکھوں روپے بھی میں نے اپنے ملک اور نسلوں کی محبت میں خرچ کیے ہیں تاکہ پچھلے چار سالوں میں جو گند ان فرعونوں نے ڈالا اس کو صاف کیا جاسکے۔اوورسیز پاکستانیوں کی جانب سے عمران خان کی حمایت سے متعلق سوال پر لیگی کارکن کا کہنا تھا کہ عمران خان کے ساتھ وہ لوگ ہیں جو 20 سالوں سے پاکستان ہی نہیں آئے۔جلسے میں دوبارہ شرکت کے حوالے سے متعلق سوال پر مقامی لیگی عہدیدار کا کہنا تھا کہ اگر میرے قائد نواز شریف لندن سے پاکستان واپس آئے تو میں ان کے ساتھ دوبارہ اسی فلائٹ میں لندن سے پاکستان آؤں گا چاہے وہ ٹکٹ پھر مجھے 50 لاکھ کی کیوں نہ پڑے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button