پاکستان

پی ٹی آئی اراکین اسمبلی میں واپس نہ آئے تو استعفے قبول کرلیے جائینگے، وفاقی حکومت نے واضح کردیا

اسلام آباد( آن لائن ) وفاقی وزیر تعلیم رانا تنویر نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی اراکین اگر قومی اسمبلی میں واپس نہ آئے تو اس کے استعفے قبول کرلیے جائیں گے، ایم کیو ایم کا وزیراعظم سے گلہ مناسب نہیں ،بلدیاتی نظام پر شہباز شریف نہیں بلکہ سندھ حکومت جوابدہ ہے۔

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر تعلیم رانا تنویر نے کہا کہ پی ٹی آئی ارکان نہیں چاہتے کہ اْن کے استعفے قبول ہوں، جو کہتے ہیں کہ استعفے نہیں دیئے وہ الیکشن کمیشن جائیں، اگر طلبی کے باوجود ارکان نہ آئیں تو استعفے قبول کرلیے جا ئیں، مستعفی اراکین اسمبلی کے حلقوں کو خالی نہیں چھوڑا جا سکتا۔ر سندھ میں ہونیوالے بلدیاتی انتخابات اتحادی ایم کیو ایم سے متعلق پوچھے گئے سوال پر رانا تنویر نے کہا کہ ایم کیو ایم کا وزیرراعظم شہبازشریف سے گلہ درست نہیں ، بلدیاتی نظام وزیرراعظم کی نہیں بلکہ سندھ حکومت کی ذمہ داری ہے،آئین کی خلاف وزری ہوئی ہے تو ایم کیو ایم سپریم کورٹ جائے۔ وزیر تعلیم کا کہنا تھا کہ ملک کو درست سمت میں گامزن کردیا ہے، مسائل کی وجہ عمران خان کی غلط پالیسیاں اور فیصلے ہیں۔ لوڈشیڈنگ اور دیگر مسائل جلد حل ہونا شروع ہوجائیں گے۔ حکومت نے مشکل فیصلے کرلیے ہیں، تاہم دو چار ماہ میں حالات بہتر ہو جائیں گے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button