پاکستان

عمران حکومت کے پٹرولیم شعبے میں غلط فیصلوں کی تحقیقات کے لئے کمیشن بنانے کا فیصلہ

اسلام آباد(آن لائن ) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ عمران خان کی حکومت کے پٹرولیم کے شعبے میں غلط فیصلوں کی تحقیقات کے لیے کمیشن بنایا جائے گا،سری لنکا جیسے فسادات سے بچنے کے لیے عمران خان کو نکالا گیا، ممنوعہ فنڈنگ لے

کر عمران خان کو ملک کی اینٹ سے اینٹ بجانے کیلئے مسلط کیا گیا۔اسلام آباد میں وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی احسن اقبال کے ہمراہ پریس کانفر نس کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پچھلے 4 سال میں بجلی، گیس، پٹرول، ایل این جی سمیت دیگر معاملات کا جائزہ لینے کے لیے کمیشن بنایا جائے گا، کمیشن کی کارروائی میڈیا کے لیے اوپن ہوگی۔انہوں نے کہا کہ عمران خان اور ان کی کابینہ کے غلط فیصلوں سے ملک کو اربوں روپے کا نقصان ہوا، عمران خان نے پچھلے چار سال میں انرجی سیکٹرکوتباہ کیا، کمیشن کی رپورٹ عوام کے سامنے رکھی جائے گی، عمران خان اور ان کے وزرا کمیشن کو اپنی صفائی پیش کرسکتے ہیں۔ اس مو قع پروفاقی وزیر احسن اقبال کا کہنا تھا کہ عمران خان کی حکومت کے پٹرولیم کے شعبے میں غلط فیصلوں کی تحقیقات کے لیے کمیشن بنایا جائے گا، کمیشن بنانے کا مقصد توانائی کے شعبے میں عمران خانیکے دور کی کرپشن سامنے لانا ہے پاکستان بدترین توانائی کے بحران سے گزر رہا ہے موجودہ حکومت کو آئے ہوئے دو ماہ ہوگئے، ہمیں یہ صورتحال ورثے میں ملی نومبر دسمبر2021 میں توانائی کے بحران کی نشاندہی کر دی گئی تھی لوڈ شیڈنگ سے عوام اور صنعتیں متاثر ہو رہی ہیں عمران خان نے بروقت فیصلے نہ کرکے ملک کو تباہی کے دہانے پر کھڑا کر دیا ممنوعہ فنڈنگ لے کر عمران خان کو ملک کی اینٹ سے اینٹ بجانے کیلئے مسلط کیا گیا

توانائی اور معیشت کی بدترین حالت ورثے میں ملی عمران خان کے آئی ایم ایف سے معاہدے کے تحت مشکل فیصلے کرنا پڑے آئی ایم ایف معاہدے سے لاتعلق ہونا ملکی مفاد میں نہیں ہے ملکی معیشت کو بحال کرنے کے لیے مسلسل محنت کر رہے ہیں تحقیقاتی کمیشن عمران دور کی ملک کو دیوالیہ کرنے کے اقدامات سامنے لائیگا۔پاکستان بدترین توانائی کے بحران سے گزر رہا ہے،، ملکی معیشت کوبحال کرنے کے لیے مسلسل محنت کررہے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان اتنا بڑا چھید کر کے گئے دن رات محنت کر رہے ہیں،

چند ماہ میں معیشت کو مستحکم بنائیں گے، کمیشن کی رپورٹ کے بعد جو ذمہ داران ہونگے ان کے خلاف کارروائی کی جائے گی، لوڈشیڈنگ سے عوام اور صنعتیں متاثر ہو رہی ہیں۔احسن اقبال کا کہنا تھا کہ سری لنکا جیسے فسادات سے بچنے کے لیے عمران خان کو نکالا گیا، عمران خان نے پاکستان کو بند گلی میں لاکر کھڑا کر دیا ہے، سابق وزیراعظم کی بدترین کارکردگی کے بعد آئی ایم ایف سے واک آؤٹ نہیں کر سکتے تھے، آئی ایم ایف نے کہا ہمیں آپ پر اعتماد نہیں ہے، عمران خان نے عالمی اداروں کے سامنے پاکستان کی ساکھ کو متاثر کیا، سابقہ حکومت نے گیس کے بروقت سودے نہیں کیے

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button